ن لیگ کا اپنے قائد کیخلاف بیان دینے والے رکن اسمبلی کیخلاف سخت کاروائی کرنے کا اعلان - Roznama Punjab

تازہ ترین

Home Top Ad

Post Top Ad

Your Ads Here

ہفتہ، 26 ستمبر، 2020

ن لیگ کا اپنے قائد کیخلاف بیان دینے والے رکن اسمبلی کیخلاف سخت کاروائی کرنے کا اعلان


ن لیگ کا اپنے قائد کیخلاف بیان دینے والے رکن اسمبلی کیخلاف سخت کاروائی کرنے کا اعلان

جلیل شرقپوری کو ڈی سیٹ کروانے کا فیصلہ، رکن پنجاب اسمبلی نے کہا تھا کہ نواز شریف نے فوج مخالف بیان دے کر مودی کی زبان بولی


لاہور (روزنامہ پنجاب تازہ ترین۔ 26 ستمبر2020ء) ن لیگ کا اپنے قائد کیخلاف بیان دینے والے رکن اسمبلی کیخلاف سخت کاروائی کرنے کا اعلان، جلیل شرقپوری کو ڈی سیٹ کروانے کا فیصلہ، رکن پنجاب اسمبلی نے کہا تھا کہ نواز شریف نے فوج مخالف بیان دے کر مودی کی زبان بولی۔ تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ ن نے اپنے رکن پنجاب اسمبلی جلیل شرقپوری کی اسمبلی رکنیت ختم کروانے کا اعلان کیا ہے۔

جلیل شرقپوری کی جانب سے اے پی سے میں فوج مخالف تقریر کرنے پر نواز شریف کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا تھا۔ اس حوالے سے ن لیگ کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ جلیل شرقپوری کو ایک ہفتے کے اندر جواب جمع کروانے کی ہدایت کی گئی ہے، جبکہ ان کی بنیادی پارٹی رکنیت معطل کر دی گئی ہے۔ جلیل شرقپوری جواب جمع کروانے میں ناکام رہے تو الیکشن کمیشن سے رابطہ کر کے انہیں ڈی سیٹ کروایا جائے گا۔

(جاری ہے)




جبکہ پارٹی فیصلے پر ردعمل دیتے ہوئے جلیل شرقپوری کا کہنا ہے کہ انہوں نے اپنے بیان میں کوئی غلط بات نہیں کی۔ واضح رہے کہ جلیل شرقپوری نے ہفتے کی شام کو جاری بیان میں کہا تھا کہ پاک فوج مخالف تقریر قومی مفاد کے سراسر خلاف ہے۔ مجھ سمیت محب الوطن پاکستانیوں کی کثیر تعداد ایسے منفی موقف سے اعلان لاتعلقی کرتی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ افواج پاکستان ملکی سلامتی کی خاطر سرحدوں پر اپنا تن، من، دھن قربان کرنے پر تیار ہیں۔

نواز شریف کا فوج مخالف بیان دشمن کو مضبوط کرنے کے مترادف ہے، ن لیگی قیادت نے اے پی سی اجلاس کے دوران ہمارے دشمن بھارت اور مودی کی زبان بولی۔ اس لیے اپنی قیادت کے ایسے ملک دشمن بیانات سے میرا اور دیگر کئی ن لیگی ارکین اسمبلی کا کوئی تعلق نہیں ہے۔            

کوئی تبصرے نہیں:

ایک تبصرہ شائع کریں

Post Bottom Ad

YOUR AD HERE